بینظیر بھٹو کی بھانجی کا بولڈ فوٹو شوٹ سوشل میڈیا پرہلچل ۔۔۔

بے نظیر بھٹو کی بھانجی اور صنم بھٹو کی صاحبزادی آزادے حسین نے فلموں کے بعد باقاعدہ ماڈلنگ شروع کر دی ہے۔ اس مقصد کے لئے وہ لندن میں فوٹو شوٹ کرا رہی ہیں۔ آزادے حسین کے بارے میں بتایا گیا ہے کہ وہ بہت جلد کئی اور فلموں میں بھی کام شروع کر دیں گی۔ اس مقصد کے لئے فلمساز ان کے ساتھ رابطہ کر رہے ہیں۔ ان کے والد ناصر حسین اور والدہ صنم بھٹو میں طویل عرصہ قبل علیحدگی ہو چکی ہے جس کے بعد صنم بھٹو نے شادی نہیں کی۔ ان کا زیادہ وقت بیرون ملک گزرتا ہے اور اپنے خاندان کے برعکس ان کی سیاست میں کوئی دلچسپی نہیں۔ ان کی صاحبزادی آزادے حسین مختلف مصنوعات کے لئے ماڈلنگ کر رہی ہیں۔ ذرائع کے مطابق کچھ اور مصنوعات کے تیار کنندگان بھی ان کی ماڈلنگ میں دلچسپی رکھتے ہیں۔ اس سے پہلے یہ خبر شائع ہو چکی ہے کہ اسلام آباد کا ایک پروڈکشن ہاﺅس بے نظیر بھٹو کی زندگی پر فلم بنا رہا ہے۔ اس فلم کا مرکزی کردار آزادے حسین کو دینے کی خواہش ظاہر کی گئی ہے کیونکہ ان کی شکل اپنی خالہ یعنی بے نظیر بھٹو کے ساتھ کافی حد تک ملتی ہے۔ فی الحال یہ فلم تیاریوں کے ابتدائی مراحل میں ہے۔ ابتدائی کام کی تکمیل کے بعد پیپلزپارٹی کی مرکزی قیادت اور آزادے حسین سے اس سلسلے میں رابطہ کیا جائے گا۔ بتایا گیا ہے کہ آزادے پہلے ہی دو انگلش فلموں میں کام کر چکی ہے جن کے نام کرش اور ریفنڈر ہیں۔ یہ پروڈکشن ہاﺅس آزادے کے بھائی شاہ میر کو بھی فلم میں کام کرنے پر آمادہ کیا جائے گا۔ کیونکہ وہ کافی خوش شکل ہے۔ معلوم ہوا ہے کہ صنم بھٹو کی بیٹی کو نئی دوسری فلموں میں کام کرنے کی بھی آفر ہے جس کے بارے میں وہ غور کر رہی ہیں۔ واضح رہے کہ بے نظیر بھٹو ان کے والد ذوالفقار علی بھٹو اور دونوں بھائیوں مرتضیٰ بھٹو اور شاہنواز بھٹو غیر فطری موت سے ہمکنار ہوئے تھے۔ شاہنواز فرانس میں پراسرار طور پر ہلاک ہوئے وہ اپنے فلیٹ میں مردہ پائے گئے تھے جبکہ مرتضیٰ بھٹو کو کراچی میں اس دور میں قتل کر دیا گیا تھا جب ان کی ہمشیرہ بے نظیر بھٹو پاکستان کی وزیراعظم تھیں۔ آزادے کی والدہ صنم بھٹو سیاست میں نہیں آئیں اور ناصر حسین سے طلاق کے بعد انہوں نے دوسری شادی نہیں کی اور ان دنوں گھریلو زندگی بسر کر رہی ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں